حقارت

(Zeena, Lahore)

انسان کسی کو اسکی زات اور لباس سے حقیر نہ سمجھے کیوں کہ اسے دینے والا اور مجھے دینے والا ایک اللہ ہی ہے ۔انسانوں سے محبت کرنا سیکھئے انکی عزت کرنا سیکھئے کیوں کے وقت بدلتے دیر نہیں لگتی ۔

یہاں ایک علمائے دین نے ایک کتے کو ساتھ کیا سلوک کیا ، آپکی نظر۔۔۔

حضرت بایزید رحمتہ اللہ علیہ ایک مرتبہ اپنے ارادت مندوں کے ہمراہ ایک تنگ گلی سے گزر رہے تھے ، کہ سامنے سے ایک کتا آ گیا۔

چنانچہ آپ نے اور مریدین نے راستہ چھوڑ دیا اور وہ کتا آگے نکل گیا۔

اسی وقت کسی مرید نے پوچھا کہ جب خدا نے انسان کو اشرف المخلوقات بنایا ہے ، تو پھر آپ نے کتے کے لئے راستہ کیوں چھوڑ دیا، اس سے تو ایسا محسوس ہوتا ہے کہ کتے کو ہم پر برتری حاصل ہے، اور یہ بات خلاف عقل ہے اور خلاف شرع بھی۔

آپ نے جواب دیا کہ “ اس کتے نے مجھ سے سوال کیا تھا کہ ازل میں مجھے کتا اور آپکو سلطان العارفین کیوں بنایا گیا اور اس میں میرا کیا قصور تھا اور آپکی کیا فضیلت تھی ۔

چنانچہ میں نے اس خیال سے کہ اللہ کا کتنا بڑا انعام ہے کہ اس نے مجھے کتے پر فضیلت عطا کردی کہ اس لئے میں نے راستہ چھوڑ دیا “

اس واقعہ میں ہم جیسے لوگوں کے لئے سبق ہے کہ کسی کو بھی حقیر نا جانو ،بس اتنا خیال کرو کے اگر اللہ اسکی جگہ ہمیں وہ بنا دیتا کیا تب بھی ہم خود سے نفرت کرتے ؟ خود کو حقیر جانتے ؟ یہ تو ایک کتے کی بات تھی، میں نے انسانوں کو ایک دوسرے کا مزاق اڑاتے دیکھا ہے ۔ کیوں حسین ہونے سے دوسرے کو حقیر جانتا ہے ،تو کوئی مالدار ہونے سے غریب کے سامنے اکڑتا پھرتا ہے۔ تو کوئی تعلیم پر ۔

ہمارے معاشرے میں ایسئ بہت سی مثالیں ملے گی ۔ بس یہ کہوں گی کسی کو حقیر سمجھنے سے پہلے خود کو اسکی جگہ پر رکھ کر ایک بار ضرور سوچنا کہ اگر اللہ مجھے وہ بنا دیتا پھر؟ اور شکر ادا کرنا کہ اللہ نے آپکو وہ نہیں بنایا۔۔۔۔
 

Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
22 Mar, 2017 Total Views: 803 Print Article Print
NEXT 
About the Author: Zeena

I Am ZeeNa
https://zeenastories456.blogspot.com
.. View More

Read More Articles by Zeena: 83 Articles with 61929 views »
Reviews & Comments
Do u write in english too ?
By: Naveed Afzal, vehari on May, 07 2017
Reply Reply
0 Like
very nice selection, thanks lot for sharing.
By: Zulfiqar Ali Bukhari, Rawalpindi on May, 03 2017
Reply Reply
0 Like
Hamesha Ki Tarah Aap Ny Boht Acha, Khobsurt aor Ikhlaqi Tarbiat Ka Hamil Article Likha.
Boht Khob Sister
By: Abdul Kabeer, Okara on Mar, 30 2017
Reply Reply
0 Like
shukriyaaaaaaaa bhai :)
By: Zeena, Lahore on Mar, 31 2017
0 Like
nice article zeena, keep it up!
By: SM khalid, karachi on Mar, 25 2017
Reply Reply
0 Like
thnx
By: Zeena, Lahore on Mar, 27 2017
0 Like
Very nice sis ,,,,Bhot acha likha apny,,,be shak insaan ki asal pehchan ,,,us ka ikhlak hai ,,,
By: Mini, mandi bhauddin on Mar, 25 2017
Reply Reply
0 Like
beshak .,,,,,, thank you mini :)
By: Zeena, Lahore on Mar, 26 2017
0 Like
Well done bhot unmda likha hy apny humsha bhtreen likhti rhy humary liy khosh rho
By: abrish anmol, sargodha on Mar, 25 2017
Reply Reply
0 Like
ameen .....thank you abrish sis :)
By: Zeena, Lahore on Mar, 26 2017
0 Like
very good zeena bht article likha hai ap ni sab k liye bht acha lesson hai is mai,,,,,,,,
By: umama khan, kohat on Mar, 24 2017
Reply Reply
0 Like
g bilkul ,,,, thank you umama khan :)
By: Zeena, Lahore on Mar, 26 2017
0 Like
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB