خیالوں کی لڑی پِروتے ہیں
Poet: UA
By: UA, Lahore

لفظ میں لفظ جوڑ دیتے ہیں
خیالوں کی لڑی پروتے ہیں
خیال آتے ہیں قلم چلتا ہے
کوئی آہ تو کوئی واہ کرتا ہے
کوئی تحسین و آفریں کرتا ہے
کوئی تنقید گری کرتا ہے
تنقید و آفریں سے بیگانے
ایک ہم ہیں کہ لکھے جاتے ہیں
بِنا پوچھے بِنا بتائے ہوئے
دِل میں جو بھی خیال آتے ہیں
خامہ فرسائی کئے جاتے ہیں
غزل سرائی کئے جاتے ہیں
عروض و رمز سے بیگانے ہیں
تغزل کے مگر دیوانے ہیں
لفظ میں لفظ جوڑ دیتے ہیں
خیالوں کی لڑی پروتے ہیں
خیال آتے ہیں قلم چلتا ہے
کوئی آہ تو کوئی واہ کرتا ہے
 

Rate it: Views: 13 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 02 Mar, 2017
About the Author: uzma ahmad

sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More

Visit 2376 Other Poetries by uzma ahmad »
 Reviews & Comments

Ahaa! thatz gud.....
ہم ناشناسِ سخن کیا جانیں
سخن کیا ہے سخنور ی کیا ہے
ہم تو خیال لکھ دیتے ہیں
stay blessed!!!
By: Faiza Umair
By: Faiza Umair, Lahore on Mar, 13 2017
Reply Reply to this Comment
Thanks Dear Thanks a lot for your valuable comments and appreciation
be happy and stay blessed always
By: uzma, Lahore on Mar, 13 2017
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.