سُوجا سُوجا سا منہ لگتا ہے بیگم سے دو دو ہاتھ کے بعد
Poet: Faisal Sheikh
By: Faisal Sheikh , Karachi

سُوجا سُوجا سا منہ لگتا ہے بیگم سے دو دو ہاتھ کے بعد
کھانا ملتا ہے ہمیں روز اِسی پیار کے بعد

ہائے وائے بھی نہیں کر سکتا
گھورتی رہتی ہے ظالم مجھے شکار کے بعد

کل پڑوسن نے فقط ٹائم کا ہی پوچھا تھا
پھر جو بیتی مت پوچھو ساڑھے چار کے بعد

لگا کے سرخی پاؤڈر کالے مسکارے کے ساتھ
اور بھیانک لگتی ہے وہ مجھے سنگھار کے بعد

بنا کے مرچوں کا سالن روٹی کباب کے ساتھ
ساری چٹنی بھی کھا جاتی ہے اچار کے بعد

اس کے جانے سے جو آجاتی ہے منہ پہ رونق
کتنا پیارا سا یہ گھر لگتا ہے گلنار کے بعد

Rate it: Views: 32 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 21 Feb, 2017
About the Author: Faisal Sheikh

I enjoy simple things in life, in fact I believe in living life to the fullest... And yes if I can mingle with the crowd, I also love n enjoy my own c.. View More

Visit 49 Other Poetries by Faisal Sheikh »
 Reviews & Comments
Wah wah kya kehne
By: SAEED ANSARI, pune on Apr, 13 2017
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.