ایک بار کسی نے دیکھا تھا ترچھی نگاہ سے
Poet: M.ASGHAR MIRPURI
By: M.ASGHAR MIRPURI, BIRMINGHAM

ایک بار کسی نے دیکھا تھا ترچھی نگاہ سے
کچھ نظر نہیں آتا پچھلے چھ ماہ سے

کسی حسیں چہرے کی سمت دیکھتے نہیں کبھی
ہم لوگ تو ڈرتے رہتے ہیں گناہ سے

شادی شدہ لوگوں کی حالت دیکھ کر
اب کنوارے ڈرنے لگے ہیں شادی بیاہ سے

اقرار کے بدلے انکار ہی ملا ہے
پہلی بار دل مانگا تھا بڑی چاہ سے

کئی دنوں سے جس کے انتظار میں بیٹھے ہیں
وہ شخص اب گزرتا نہیں اس راہ سے

 

Rate it: Views: 5 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 12 Nov, 2017
About the Author: M.ASGHAR MIRPURI

Visit 6759 Other Poetries by M.ASGHAR MIRPURI »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.