محبت تھی کہ سودا تھا
Poet: محمد اطہر طاہر
By: Athar Tahir, Haroonabad

تضادِ محبت
عجیب اک فرق تھا
ہم دونوں کی محبت میں
مجھے اپنی زندگی کی
تمام ضروریات سے پہلے
جسم و جان سے پہلے،
اپنی ہر سانس سے پہلے
فقط اس کی ضرورت تھی
اور اس کے برعکس
اس کو تمام ضروریات
آسائیشات و تعیشات
معاشرے میں مقامِ بالا
اس پر بھی کچھ شرائط
اس سے بھی بہت بعد
شاید "میں"
شاید یہ محبت تھی
شاید یہ اک سودا تھا

Rate it: Views: 4 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 08 Oct, 2017
About the Author: Athar Tahir

Visit 94 Other Poetries by Athar Tahir »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.