کینیڈین بلاگر روزی گیبریل نے اسلام قبول کرنے کی وجہ بتا دی

نامور کینیڈین ٹریول بلاگر اور موٹر سائیکلسٹ روزی گیبریل نے اسلام قبول کرلیا۔
گزشتہ روز سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر روزی نے اپنی ایک خوبصورت تصویر شئیر کی جس میں انہوں نے قرآن شریف اٹھایا ہوا ہے۔ تصویر کا کیپشن کافی طویل تھا جس میں انہوں نے اپنے اسلام قبول کرنے کا اعلان کیا اور ساتھ ہی اپنے اس اقدام کی وجہ بھی بتائی۔

کیپشن کے آغاز میں روزی نے تحریر کیا کہ 'میں نے اسلام قبول کرلیا ہے' ساتھ ہی سوالیہ انداز میں لکھا کہ 'کیا وجہ تھی جو میں نے یہ فیصلہ کیا؟' روزی کا کہنا تھا کہ 'پچھلا سال میری زندگی کا مشکل ترین سال تھا، میں نے اس سال بہت سے اہم فیصلے کئے۔ میرا ہمیشہ سے ہی خدا سے ایک خاص تعلق رہا ہے، میں نے اپنی ہر تکلیف میں خدا سے شکایت کی کہ آزمائش کے لئے میں ہی کیوں؟ اور تب تک شکایت کرتی رہی جب تک مجھے یہ اندازہ نہیں ہوا کہ جو ہوتا ہے کسی وجہ سے ہی ہوتا ہے اور کبھی کبھی تکالیف اور آزمائشیں بھی خدا کی طرف سے تحفہ ہوتی ہیں'۔

بلاگر نے لکھا کہ 'میں نے 4 سال قبل اپنے مذہب سے دوری اختیار کی اور روحانیت میں اپنے خوف کا حل تلاش کیا۔ گزشتہ 10 سال میں نے مسلم دنیا میں گزارے اور یہاں مجھے جو چیز سب سے زیادہ ملی وہ سکون تھا۔ میں اپنی تکلیف اور غصے سے نجات چاہتی تھی، قدرت نے مجھے پاکستان بھیج دیا اور میں نے اپنی منزل حاصل کرلی۔ بدقسمتی سے اسلام کو دنیا میں غلط معنوں اور تنقیدی نظر سے دیکھا جاتا ہے جبکہ اسلام کے حقیقی معنی امن، محبت اور برابری کے ہیں'۔

روزی نے کیپشن کا اختتام کرتے ہوئے لکھا کہ 'میں باضابطہ طور پر مسلمان ہوچکی ہوں' جبکہ اپنے مداحوں کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا کہ 'اگر کسی کا کوئی سوال ہے تو وہ کمنٹ کر کے پوچھ سکتا ہے'۔
View this post on Instagram

I CONVERTED to ISLAM☪️ . What lead me to this Big decision? . As I mentioned previously, this last year was one of the hardest in my life, and all life’s challenges have led me to this point here and now. From a young child, I’ve always had a unique connection with creation and special relationship to God. My path was far from easy and I carried a lot of anger in my heart from a lifetime of pain, always begging God, why me? Until ultimately coming to the conclusion that all is meant to be, and even my suffering is a gift. . Never resonating with what I was brought up with, I denounced my religion 4 years ago, going down a deep path of spiritual discovery.Exploration of self, and the great Divine. I never let go the sight of the Creator, in fact, my curiosity and connection only grew stronger. Now no longer dictated by fear, I was able to fully explore this righteous path. . As time passed, the more I experienced, the more I witnessed the true nature and calling for my life. I wanted to be free. Free of the pain and shackles that was hell. Liberation from the anger, hurt and misalignment. I wanted peace in my heart, forgiveness and the most profound connection with all. And thus started my journey. . The universe brought me to Pakistan, not only to challenge myself to let go of the last remaining traces of pain and ego, but also to show me the way. . Through kindness,& humbled grace of the people I met along my pilgrimage, inspired my heart to seek further. Living in a Muslim country for 10 + years and traveling extensively through these regions, I observed one thing; Peace. A kind of peace that one can only dream of having in their hearts. . Unfortunately Islam is one of the most misinterpreted and criticized religions world wide. And like all religions, there are many interpretations. But, the core of it, the true meaning of Islam, is PEACE, LOVE & ONENESS. It’s not a religion, but a way of life. The life of humanity, humility and Love. . For me, I was already technically a “Muslim”. My Shahada was basically a re-dedication of my life to the path of Oneness, connection and Peace through the devotion of God. If you have any Q’s comment below

A post shared by Rosie (@rosiegabrielle) on

YOU MAY ALSO LIKE :