ثابت ہوا کہ تم نے--- ہمیں یاد کِیا ہے
Poet: UA
By: UA, Lahore

رات سے ہچکیوں کا
تانتا بندھا ہوا ہے
بند آنکھوں میں تمہارا
عکس ابھرا آیا ہے

دَل نے سرگوشی کی
سماعتوں نے سنا
لبوں پہ تمہارا نام آیا ہے
رات سے ہچکیوں کا جو
تانتا بندھا ہوا ہے
تمہارا نام لیتے ہی
یکلخت تھم گیا ہے
ثابِت ہو کہ تم نے
ہمیں یاد کِیا ہے

رات سے ہچکیوں کا
تانتا بندھا ہوا ہے
بند آنکھوں میں تمہارا
عکس ابھرا آیا ہے

Rate it: Views: 8 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 08 Mar, 2018
About the Author: uzma ahmad

sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More

Visit 2565 Other Poetries by uzma ahmad »
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.