یہ جو شعروں کی ترجمانی ہے
Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

یہ جو شعروں کی ترجمانی ہے
عمرِ رفتہ کی اک کہانی ہے

دستِ باطل پہ ہاتھ مت کرنا
کفر و نفرت کی یہ نشانی ہے

خوب ہنسنا اگر ہنسی آئے
مختصر سی یہ زندگانی ہے

ساری دنیا میں سر بلند ہوں اگر
میرے آبا کی مہربانی ہے

میری آنکھوں میں جل گیا دریا
تیری آنکھوں میں کیسا پانی ہے

رنج و غم ، ٹھوکریں ہیں ، مایوسی
کیسی جذبوں پہ حکمرانی ہے

حق کا پرچم تو تھام لے وشمہ
کامرانی ہی کامرانی ہے

Rate it: Views: 6 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 13 Nov, 2017
About the Author: washma khan washma

I am honest loyal.. View More

Visit 4092 Other Poetries by washma khan washma »
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.