منزِل
Poet: UA
By: UA, Lahore

 ہم نے چاہا، تمہیں چاہا
خود سے بڑھ کر بہت چاہا
لیکن تمہیں اپنا نہ سکے
تمہیں اپنا بنا نہ سکے

تمہیں مانگا، تم سے مانا
جی جان سے مانگا، بہت مانگا
چاہت کی منزِل پا نہ سکے
تمہیں اپنا بنا نہ سکے

، ہم تھک گئے، ہم ہار گئے
ہمارے سب جتن بیکار گئے
خود سے تکرار کر کے
تم سے سوال کر کے
نہ قسمت بدلی، نہ تم بدلے
نہ جِیون بدلا، نہ ہم ہی بدلے

اب لیکن ہم بدل جائیں گے
اپنے لئے ، تمہارے لئے
دستِ طلب اٹھائیں گے
سجدے میں گڑگڑا کر ہم
اپنی چاہت پا جائیں گے
پھر تم ہمیں مِلو نہ مِلو
ہم راحت پا جائیں گے
تمہارا ساتھ مِلے نہ مِلے
ہم اپنی منزِل پا جائیں گے

Rate it: Views: 14 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 08 Aug, 2017
About the Author: uzma ahmad

sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More

Visit 2378 Other Poetries by uzma ahmad »
 Reviews & Comments
نہ جِیون بدلا، نہ ہم بدلے
By: uzma, Lahore on Aug, 09 2017
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.