دِل کے رشتے
Poet: UA
By: UA, Lahore

تم ہمیں بھول کیوں نہیں جاتے۔۔۔؟
ہم تمہیں بھول ہی نہیں پاتے۔۔۔!
تم ہمیں چھوڑ کیوں نہیں جاتے۔۔۔؟
ہم تمہیں چھوڑ ہی نہیں پاتے۔۔۔!

توڑنے کے لئے نہیں بنتے
چھوڑنے کے لئے نہیں بنتے
دِل سے جڑتے ہیں تو جڑ جاتے ہیں
عمر بھر ساتھ پِھر نبھاتے ہیں
جو دِل کے رشتے جڑے جاتے ہیں
کہاں وہ رشتے چھوڑے جاتے ہیں
یہی وجہ ہے مہربان میرے
یہ حقیقت ہی مہربان میرے
ہم تمہیں بھول ہی نہیں پاتے۔۔۔!
ہم تمہیں چھوڑ ہی نہیں پاتے۔۔۔!

تم ہمیں بھول کیوں نہیں جاتے۔۔۔؟
ہم تمہیں بھول ہی نہیں پاتے۔۔۔!
تم ہمیں چھوڑ کیوں نہیں جاتے۔۔۔؟
ہم تمہیں چھوڑ ہی نہیں پاتے۔۔۔!

Rate it: Views: 15 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 10 Aug, 2017
About the Author: uzma ahmad

sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More

Visit 2402 Other Poetries by uzma ahmad »
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.