دھوکہ دے گیا اپنا بخت
Poet: Rana Tabassum Pasha(Daur)
By: Rana Tabassum Pasha(Daur), Dallas, USA

‎دھوکہ دے گیا اپنا بخت
‎وقت کڑا اور گھڑی ہے سخت

‎لُٹ گیا سپنوں کا راج محل
‎اب کیسا تاج اور کیسا تخت

‎نین کنول جب مرجھا گئے
‎رویا دل کا ایک اِک لخت

‎عمر کی پونجی گھٹتی جائے
‎باندھوں اب میں سفر کا رخت

‎چہرہ پتھر نظریں خنجر، اُس پر
‎لفظ بنجر اور لہجہ کرخت

‎زندگی کے گھنے جنگل میں
‎رعنا تن تنہا ایک درخت

Rate it: Views: 15 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 20 Apr, 2017
About the Author: Rana Tabassum Pasha(Daur)

Visit 39 Other Poetries by Rana Tabassum Pasha(Daur) »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.