اپنی ہی تیغ ادا سے آپ گھائل ہو گیا
Poet: Munir Niazi
By: hassan, khi

اپنی ہی تیغ ادا سے آپ گھائل ہو گیا
چاند نے پانی میں دیکھا اور پاگل ہو گیا

وہ ہوا تھی شام ہی سے رستے خالی ہو گئے
وہ گھٹا برسی کہ سارا شہر جل تھل ہو گیا

میں اکیلا اور سفر کی شام رنگوں میں ڈھلی
پھر یہ منظر میری نظروں سے بھی اوجھل ہو گیا

اب کہاں ہوگا وہ اور ہوگا بھی تو ویسا کہاں
سوچ کر یہ بات جی کچھ اور بوجھل ہو گیا

حسن کی دہشت عجب تھی وصل کی شب میں منیرؔ
ہاتھ جیسے انتہائے شوق سے شل ہو گیا

Rate it: Views: 178 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 04 Nov, 2016
About the Author: owais mirza

Visit Other Poetries by owais mirza »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
There is no any specific style of Munir Niazi Shayari, he wrotes his poetries on different matters and different style that is the reason of his popularity among the peoples those who love urdu.
By: Ghafoor, lhr on Jan, 19 2017
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.