ہم قطر کے خبروں کے اداروں کی ہیکنگ میں ملوث نہیں: متحدہ عرب امارات

17 Jul, 2017 وائس آف امریکہ اردو
تاہم، قطر میں اہل کاروں کا کہنا ہے کہ وہ اِس رپورٹ پر یقین رکھتے ہیں جس میں اس واقعے میں متحدہ عرب امارات کو ملوث بتایا جاتا ہے، جس کے منظر عام پر آنے پر مئی میں سفارتی بحران پیدا ہواواشنگٹن —متحدہ عرب امارات نے پیر کے روز اس بات کی تردید کی ہے کہ اُس نے قطر کے سرکاری خبر رساں ادارے کو ہیک کیا تھا۔تاہم، قطر میں اہل کاروں کا کہنا ہے کہ وہ اِس رپورٹ پر یقین رکھتے ہیں جس میں اس واقعے میں متحدہ عرب امارات کو ملوث بتایا جاتا ہے، جس کے منظر عام پر آنے پر مئی میں سفارتی بحران پیدا ہوا۔’واشنگٹن پوسٹ‘ نے اتوار کے روز کہا ہے کہ امریکہ کے خفیہ اداروں کو گذشتہ ہفتے پتا چلا کہ متحدہ عرب امارات نے حکومت قطر کی خبروں اور سماجی میڈیا کے سائٹس کو ہیک کیا، جس دوران قطر کے امیر کے من گھڑپ بیان شائع کیے گئے۔متحدہ عرب امارات کے مملکتی وزیر برائے امورِ خارجہ، انور غرغاش نے اس رپورٹ کو مسترد کیا ہے۔ اُنھوں نے کہا ہے کہ ’’بالکل نہیں۔ بالکل بھی نہیں۔ اور میرے خیال میں، پہلے ہی واشنگٹن میں ہمارے سفارت خانے نے تردید جاری کی ہے، اور میں سمجھتا ہوں کہ یہ ایک بحران ہے، جب کہ بہت سی افواہیں گردش کر رہی ہیں، بہت سی جھوٹی اطلاعات اور خبریں چل رہی ہیں‘‘۔دوسری جانب، قطر کے رابطے پر مامور سرکاری دفتر نے کہا ہے کہ رپورٹ سے ’’واضح طور پر ثابت ہوتا ہے کہ ہیکنگ کا جرم سرزد ہوا‘‘۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یہ بات واضح نہیں آیا یہ ہیکنگ متحدہ عرب امارات نے خود کی ہے یا اس کا ٹھیکہ کسی اور کو دیا گیا۔امریکی محکمہٴ خارجہ نے اس رپورٹ پر کسی ردعمل کا اظہار نہیں کیا، یہ کہتے ہوئے کہ وہ انٹیلی جنس کے معاملات پر کوئی بیان نہیں دیا کرتا۔قطر کے امیر تمیم بن حماد الثانی کے حوالے سے مئی کے اواخر میں غلط طور پر خبریں دی گئی تھیں کہ اُنھوں نے ایران کو ’’اسلامی طاقت‘‘ قرار دیا ہے؛ اور حماس کی فلسطینی تنظیم کی تعریف کی ہے۔ چوبیس مئی کی ہیکنگ کے بعد سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر نے قطر پر الزام لگایا کہ وہ دہشت گردی کا حامی ہے، جس پر دوحہ کے ساتھ جون کے اوائل میں سفارتی تعلقات ختم کرتے ہوئے، 13 مطالبات کی فہرست اُس کے حوالے کی گئی۔قطر نے اِن مطالبات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اِن سے اُس کے اقتدار اعلیٰ کو نقصان پہنچے گا۔ اس میں وہ الٹیمیٹم بھی شامل ہے جس میں ’الجزیرہ نیوز نیٹ ورک‘ کو بند کرنے، اخوان المسلمین جیسے اسلام نواز گروپ کے ساتھ تعلقات منقطع کرنے، ایران کے ساتھ رابطوں کو محدود کرنے اور اپنے علاقے سے ترک فوجوں کو باہر نکالنے کے لیے کہا گیا ہے۔ فیس بک فورم

Watch Live News

بغدادی کے ہلاک ہونے کا کوئی ثبوت نہیں: اعلیٰ امریکی اہل کار

22 Jul, 2017 وائس آف امریکہ اردو

انسداد دہشت گردی سے وابستہ اعلیٰ اہل کار کے بقول، ’’ہمارے پاس ایسی کوئی اطلاع نہیں جس سے ا ... مزید

دریا ئے سندھ میں پانی کی سطح تیزی بلند، گڈو بیراج کے مقام پر نچلے درجے کے سیلاب کا امکان

22 Jul, 2017 نیو

سکھر: ملک کے مختلف حصوں میں مون سون بارشوں کے باعث دریا ئے سندھ میں پانی کی سطح تیزی سے بل ... مزید

لاڑکانہ پولیس کی مختلف علاقوں میں جرائم پیشہ افراد کے خلاف کارروائی، 13 ملزمان گرفتار

22 Jul, 2017 نیو

لاڑکانہ : لاڑکانہ پولیس کی ضلع کے مختلف علاقوں میں جرائم پیشہ افراد کے خلاف کارروائی، سنگ ... مزید

خواتین کی نازیبا ویڈیوز بنا کر بلیک میل کرنے والا" جعلی پیر "گرفتار

22 Jul, 2017 نیو

جموں و کشمیر : ریپ کرنے کے بعد خواتین کی فلمیں بنا کر ان کو بلیک میل کرنے والے" جعلی پیر " ... مزید

چینی حکومت نے جسٹن بیبر پر پابندی لگا دی

22 Jul, 2017 نیو

بیجنگ : مایہ ناز کینیڈین گلوکار جسٹن بیبر کا پوری دنیا گھومنے کا خواب ادھورا رہ گیا کیونکہ ... مزید

پاکستان دہشت گردوں کیلئے بدستور ایک محفوظ پناہگاہ ہے: امریکی محکمہ خارجہ

21 Jul, 2017 وائس آف امریکہ اردو

 ... مزید

Load More
Post Your Comments
Select Language:    
MORE ON NEWS
MORE ON HAMARIWEB