بے خیالی میں سنگ تیرے

(Amna Shafiq, Karachi)

وہ ذیانت اور خوبصورتی کا مکمل پیکر تھا۔ اسے دیکھ کر اندازہ ہوتا کہ ہینڈسم کہتے کس بلا کو ہیں۔ ہم پانچ کلاس فیلوز کا گروپ تھا جس میں تین لڑکیاں، ایک لڑکا اور "وہ" تھا۔ آبی ملک عرف عبدل۔ وہ مجھے کب اچھا لگنے لگا میں نہیں جانتی۔ شاید تب سے جب سے میں نے اسے پہلی بار دیکھا۔ وہ ہر لڑکی کا آئیڈیل تھا۔ اس میں یہ قابلیت تھی کہ ہر کوئی اسے پسند کرنے پر مجبور ہوجاتا۔

میں اس کے رنگ میں رنگنا چاہتی تھی۔ ۔۔اور میں رنگتی گئی۔ خاموش موسم کی طرح بدلتی گئی۔

وہ کہتا "مجھے لڑکیاں ہر فیلڈ میں آگے بڑھتی پسند ہیں"۔ میں تقریروں میں حصہ لیتی اور ہر کامپیٹیشن میں اپنا سکہ منوانے کی کوشش کرتی۔ وہ کہتا "لڑکیاں دھیمی آواز میں دھیمی مسکراہٹ سے بات کرتے ہوئے ایٹریکٹ کرتی ہیں"۔ میں ویسا انداز اپنانے لگی، وہ یہ سب مجھے نہیں کہتا تھا بس اس کی باتوں سے میں یہ باتیں اچک لیتی تھی۔ علینہ کہتی "تم میں کافی تبدیلیاں آرہی ہیں"۔ میں مسکرا دیتی۔ وہ ایک اچھی لڑکی تھی خاموش اور گہری، سب محسوس کرنے والی مگر چپ رہنے والی۔

"وہ کہتا لڑکیوں کے ہوا سے اڑتے کھلے بال زبردست لگتے ہیں"۔ میں سکارف اتار کر جانے لگی اور بالوں پر خوب محنت شروع کردی۔ "اس نے کہا تھا کہ لڑکیوں پر شلوار کرتا جچتا ہے"۔ میں نے اپنا عبایا اتار کر نت نئے ڈیزائن کے کپڑے خریدے اور زیب تن کرنے لگی۔ تاکہ اس کی نظر مجھ پر جم جائے۔

اور آج میں نے اسے دیکھا جیسے پہلی بار دیکھا ہو۔۔ سنا! جیسے پہلی بار سنا ہو۔

"تم ایسے بہت اچھی لگتی ہو۔ یہ حجاب ، یہ میچورٹی ، یہ سوچ۔۔۔ یہ سب مجھے اٹریکٹ کرتا ہے۔ تم ان رنگوں میں بےحد حسین لگتی ہو اور میرے دل کو بھاتی ہو۔" میں نے اسے یہ کہتے سنا۔ لیکن پھر اس کی مخاطب کی آواز ابھری۔ "یہ حجاب میرے خدا کو بھاتا ہے۔ میرے ہونے والے مجازی خدا کو جو بھائے گا وہ میں اسے خوش کرنے کو کروں گی لیکن اپنے رب کو ناراض کرنے والا عمل نہیں کروں گی"۔ علینہ مسکرائی اور اسے دیکھ کر آبی بھی۔"تبھی تو میری منگ ہو" ۔ اور مجھے بے اختیار دیوار کا سہارا لینا پڑا ۔

"بے خیالی میں سنگ تیرے ۔۔۔ میں اپنا آپ گنوا بیٹھی۔۔۔ بے خیالی میں سنگ تیرے۔۔۔ میں اپنا رب ناراض کر بیٹھی۔۔"

Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
07 Sep, 2017 Total Views: 305 Print Article Print
NEXT 
About the Author: Amna Shafiq

I'm a Student. I love to read novels . And i like to write too just so i can share my words with world... View More

Read More Articles by Amna Shafiq: 12 Articles with 6050 views »
Reviews & Comments
Amazing!
I waw expecting this type of novlet from you.
And you proved that you're gona be a good/best writer in future. (In sha Allah)
You'll be my maryam Jani in future. Ok? 😁
May Allah give you lots of happiness and success in life.(Ameen ya Rab)
ILY💞
By: Faiza tahirbutt, Lalamusa,Punjab on Sep, 14 2017
Reply Reply
1 Like
Uff itni tareef... 😀 Shukriya shukriya....in shaa Allah
Ameen , same to you... And i love you more ❤️
By: Amna Shafiq, Karachi on Sep, 15 2017
1 Like
Bhot khoobsurat likha hai.. stay blessed <3
By: Aayna khan, Dikhan on Sep, 14 2017
Reply Reply
1 Like
Thankyouu Ayna..you too<3
By: Amna Shafiq, Karachi on Sep, 15 2017
0 Like
bohoth hi umda andaaz may aap is short story kay zariyai bohoth acha message diya hay ... bohoth hi shandaar .... jeeti rehyai ..... Jazak Allah Hu Khairan Kaseera

By: farah ejaz, Karachi on Sep, 14 2017
Reply Reply
1 Like
Thankyou Farah, apke alfaaz hameesha mujhe asmaan par pohncha dete hain :D wa-iyyaki
By: Amna Shafiq, Karachi on Sep, 14 2017
0 Like
good short but deep story..... stay blessed!!
By: Faiza Umair, Lahore on Sep, 12 2017
Reply Reply
1 Like
Thankyou so much... Jazakallah khair :)
By: Amna Shafiq, Karachi on Sep, 13 2017
0 Like
shandar
buht khoob
good luck and stay bless forever
By: uzma ahmad, Lahore on Sep, 11 2017
Reply Reply
1 Like
Thankyou so much...Jazakallahu khairan :)
By: Amna Shafiq, Karachi on Sep, 13 2017
0 Like
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB