پاکستان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں کے حیران کن ورلڈ ریکارڈ

 

ہر کوئی جانتا ہے کہ پاکستان کرکٹ ٹیم دنیا کی ایک ایسی کرکٹ ٹیم ہے جس کے بارے میں کوئی پیشن گوئی نہیں کی جاسکتی- یہ ٹیم کھیل کے میدان کب کیا کارنامہ انجام دے گی؟ اس کے بارے میں کوئی اندازہ بھی نہیں لگا سکتا- گزشتہ 9 سالوں کے دوران پاکستان کرکٹ ٹیم نے کئی اتار چڑھاؤ دیکھے ہیں- لیکن کچھ بھی پاکستان کرکٹ ٹیم کئی ایسے حیران کن عالمی اعزازات کی مالک ہے جنہیں حاصل کرنے کی خواہش دنیا کے ہر کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی میں موجود ہے- آئیے ہم آپ کو پاکستان کرکٹ ٹیم کے ان ورلڈ ریکارڈز کے بارے میں بتاتے ہیں جو ہمارے لیے باعثِ فخر ہیں-
 

انٹرنیشنل کرکٹ میں سب سے زیادہ چھکے لگانے کا ریکارڈ شاہد آفریدی کے پاس ہے- انہوں نے مختلف ٹیسٹ میچز٬ ایک روزہ میچز ٹی ٹونٹی میچز کے دوران 476 چھکے لگائے-
 
سال 2006 کے دوران ٹیسٹ میچوں میں سب سے زیادہ رنز بنانے کا اعزاز محمد یوسف کے پاس ہے- انہوں نے اس سال 1788 رنز بنائے- اس کے علاوہ اسی سال انہوں نے ٹیسٹ میچوں میں سب سے زیادہ سنچریاں بنانے کا ریکارڈ بھی اپنے نام کیا- سال 2006 کے ٹیسٹ میچوں میں انہوں نے 9 سینچریاں بنائیں-
 
1997 میں ایک روزہ بین الاقوامی میچوں میں سب سے زیادہ وکٹیں لینے کا ریکارڈ ثقلین مشتاق نے 69 وکٹیں لے کر اپنے نام کیا-
 
ون ڈے انٹرنیشنل اور ٹیسٹ میچوں میں ہیٹ ٹرک کرنے کا ریکارڈ دو پاکستانی کھلاڑیوں کے پاس ہے- وسیم اکرم اور محمد سمیع دونوں ہی یہ اعزاز رکھتے ہیں-
 
جلال الدین ایک روزہ بین الاقوامی میچوں میں سب سے پہلے ایک ساتھ تین کھلاڑی آؤٹ کرنے والے باؤلر تھے- انہوں نے یہ اعزاز 1982 میں حاصل کیا-
 
ایک ہی گراؤنڈ میں سب سے زیادہ وکٹیں لینے کا ریکارڈ پاکستانی باؤلر وسیم اکرم کے پاس ہے- انہوں نے شارجہ کے گراؤنڈ میں 77 میچوں میں 122 وکٹیں لے کر یہ ریکارڈ قائم کیا-
 
ایک ون ڈے انٹرنیشنل میچ میں کپتان ہوتے ہوئے سب سے زیادہ وکٹیں لینے کا ریکارڈ وقار یونس کے پاس ہے- انہوں نے 2001 میں 36 رنز دے کر انگلینڈ کے 7 کھلاڑی آؤٹ کیے-
 
جاوید میانداد کو مسلسل نصف سنچریاں بنانے کا اعزاز حاصل ہے- انہوں نے 1987 میں مارچ سے لے کر اکتوبر تک مسلسل 9 نصف سینچریاں بنائیں-
 
ایک روزہ میچوں میں بغیر کسی سینچری کے سب سے زیادہ نصف سینچریاں بنانے کا ریکارڈ مصباح الحق کے پاس ہے- انہوں نے یہ ریکارڈ 42 نصف سینچریاں قائم کر کے اپنے نام کیا-
 
سب سے زیادہ طویل ترین ٹیسٹ اننگ کھیلنے کا اعزاز لٹل ماسٹر حنیف محمد کے پاس تھا- انہوں نے1958 میں ویسٹ انڈیز کے خلاف 970 منٹ تک بیٹنگ کی-
Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
02 Nov, 2016 Total Views: 6930 Print Article Print
NEXT 
Reviews & Comments
Just because there are hundreds of types of records.
By: Anees, Haripur on Nov, 02 2016
Reply Reply
1 Like
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
Everyone knows that Pakistan is the most unpredictable team in the world of cricket. Whether it is ODI, test or T20s, Pakistani players know how to keep the interest of people alive in cricket. Pakistan faced many ‘wax and wane’ in the last 9 years. However, in every aspect of cricket, there are Pakistanis who keep the ball rolling.
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB