گنز اینڈ روزز (قسط ٩)

(Hukhan, karachi)

ایوب توانا اپنی نئی ماڈل کی کار میں بیٹھ کر سوچنے لگا،،،بنک میں کیش
بھی بہت ہوتا ہے،،اور کیش وین بھی بڑے صحیح ٹائم پر آتی ہے،،بنک میں
آلارم سسٹم کو اک وائر سے ڈس کنیکٹ کیا جاسکتا ہے،،،

سیکیورٹی گارڈز ان ٹرینڈ لگ رہے تھے،،،ایوب توانا نئی طرز کی ایک بلڈنگ
میں گھس گیا،،،پھرتی سے خالی لفٹ میں گھس کے بارہویں فلور کا بٹن،،،
دبا دیا،،،تھوڑی دیر بعد لفٹ نیچے آگئی،،،
اب ایوب توانا نئے ڈریس اور کلین شیو ہو کے آفندی بن چکا تھا،،،اور لفٹ
میں سے آفندی برآمد ہوا،،آفندی سیدھا ٹیکسی والے کے پاس گیا،،ٹیکسی
کی منزل اب ان کی اسٹیٹ ایجنسی تھی،،،

رانا حیران ہوکر آفندی کی باتیں سن رہا تھا،،،میری کار پہنچا دی وہاں؟،،،رانا
نے اثبات میں سرہلایا،،،
سر کیسے یقین ہے ،،، کہ اگر کچھ ہوا،،،تو اسی بنک میں ہو گا؟؟؟،،،،!!!
آفندی نے راناکو غور سے دیکھا،،،رانا بات سنو،،،!! رانا نے جی کہہ کر ،،،،سارا
دھیان آفندی کی طرف منتقل کردیا،،،

آفندی بولتا چلا گیا،،،رانا،،،ڈی ایس پی بن کر نہیں ڈکیٹ بن کر سوچو،،،کہ
بنک کیسا ہونا چاہیے،،،؟؟،،،! جہاں بہت سا پیسہ با آسانی لوٹا جاسکے،،،!
رانا نے اثبات میں سرہلایا،،،
آفندی نے وکٹوریا سٹریٹ کے تین مقامات کو سرکل کرکے کہا،،،یہاں چار
وہیلر کھڑی ہوں گی،،بنک سے یہاں تک کا سفر بائیک پر ہوگا،،،یہاں کوئی
سی سی ٹی وی کیمرے نہیں ہیں،،،

ٹریفک کم،،،سگنل نہیں،،ہر طرف گھسنے کے چھ راستے ہیں،،ہر طرف سے
با آسانی موو کیا جاسکتا ہے۔۔
اک ہی پولیس چوکی ہے،،وہ بھی ٹریفک پولیس کی چوکی ہےجنت سمجھو
اس بنک کو ڈاکوؤں کی،،،

رانا کو میجر پر رشک آنے لگا،،،،آفندی کی بیپ بجنےلگی۔۔
کال سننے کے بعد آفندی کے چہرے پر خوشی کی لہرسے چہرہ ٹمٹمانے لگا،،
ہاں،،،تم اس کے پیچھےجاؤ،،ہٹلرسے کہو تمہاری جگہ لے،،بے شک اپنی پوزیشن
کو ڈراپ کردے،،،اوور اینڈ آل،،،!

رانا اسی بنک میں مشکوک آدمی آیا ہے،،،ہمارا ایجنٹ اس کے پیچھے جائے
گا،،،ہو سکتا ہے وہ کسی کاروائی سے پہلے اسےوہاں سے ہٹا دینا چاہتے ہوں،،،
اسی لیے ہٹلر اسے ری پلیس کرے گا،،،
تم اسکی موومنٹ کو اپنے سیل پر لے لو،،،ہاں اس کے آگے پیچھے دیکھتے رہنا
اس کا کوئی پیچھا نہ کررہا ہو،،،یہ چال بھی ہوسکتی ہے،،،!

رانا نے اوکے بول کر سوالیہ انداز میں آفندی کی طرف دیکھناشروع کردیا،،،،!!!
آفندی نے اطمینان سے کہا،،،سوچ رہے ہو مشکوک کیسے لگا،،،اس کی ناک
پر پٹی بندھی ہوئی ہے،،،
راناکے منہ سے،،،،اوہ!!!!!!!! نکلا،،،،،(جاری)
 

Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
11 Jan, 2018 Total Views: 822 Print Article Print
NEXT 
About the Author: Hukhan

Read More Articles by Hukhan: 932 Articles with 431182 views »

Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
Reviews & Comments
bohoth khoob .... jeetay rehyai khush bash rehyai .... Masha Allah likhnay ki raftar kafi taiz hay ... or mubarak ho 850 articles ki aik Azim Azeem sahab or aik aap Masha Allah ..... Jazak Allah Hu Khair Ran Kaseera
By: farah ejaz, Karachi on Jan, 11 2018
Reply Reply
0 Like
sister thx,,,,,its great i have readers like you
By: hukhan, karachi on Jan, 12 2018
0 Like
congratulation 850
By: khalid, karachi on Jan, 11 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on Jan, 12 2018
0 Like
fantastic,,,,,,,congratulation for 850
By: sohail memon, karachi on Jan, 11 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on Jan, 12 2018
0 Like
bhai mubariq hu 850 articles ki,,,,,,,,,,,,,asy hee likhtay rhu
By: rahi, karachi on Jan, 11 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on Jan, 12 2018
0 Like
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB